Mango Health Benefits and sides Effect 

 

آم کے فوائد

:رنگ

اس کا رنگ سبز،سرخ زردہ اور زرد ھوتا ھے

 

:ذائقہ

 

کچا آم ذائقے میں ترش ہوتا ھے جبکہ پختہ شیریں ھوتا ھے

 

 :فوائد

 

پختہ آم خون بناتاھے. یہ آنتوں کو قوت دیتا ھے. آم مقوی باہ ھے. یہ

معدہ،گردہ اور مثانہ کو طاقت دیتا ھے.آم کا مربہ پھیپھڑوں،دل اور

مثانے کو طاقت دیتا ھے.آم کے ہرے پتے اور دھنیا سبز رگڑ کر پینے

سے ہچکی بند ھو جاتی ھے.آموں کو ٹھنڈے کرکے کھانا چاہیے اور آم

کھانے کے بعد دودھ کی لسی ضرور پینی چاہیے.آم اعضائے رئیسہ کو

طاقت دیتا ھے.آموں کے کھانے سے جسم موٹا ھوتا ھے.بے خوابی کی

شکایت دور کرنے کے لیے ایک آم کھانا اور بعد ازاں ٹھنڈا دودھ  پینا

بے حد.مفید ھوتا ھے.آم کھانے کے بعد تھوڑے سے جامن کھا لئے

جائیں تو اس کی گرمی زائل ھو جاتی ھے.کھٹا آم کھانے سے گلے اور

دانتوں کو نقصان ھوتا ھے۔اس سے زکام اور خون کی خرابی بھی

ھوسکتی ھے.نہار منہ آم کبھی نہیں کھانا چاہیے اس سے معدے کو

نقصان پہنچتا ھے اور معدے میں گرمی ھوتی ھے. بغیر ٹھنڈا کئے آم

اکثر جسم پر پھوڑے،پھنساں اور آنکھوں کی بیماریاں پیدا کرتاھے آم

پیاس کو بجھاتاھے. آم کا اچار کھانے سے تلخی گھٹتی ھے. پرانے

اچار کا تیل لگانے سے سر کا گنج جاتا رہتا ھے.آم کا اچار بھوک

بڑھاتا ھے اور تلی کی سوزش کے لیے مفید ھے. آم کی چٹنی بھی بے

حد مفید ھے جو ہاضم اور معدہ جگر کو طاقت دیتی ھے.دودھ پلانے

والی خواتین کو آم کھلانے سے ان کے دودھ میں اضافہ ھوتا ھے. آم

کی گٹھلی کو پانی میں رگڑ کر نیم گرم بچھو کے کاٹے پر لیپ کرنے

سے فوراً آرام ھوتا ھے. جسم کی خشکی،بےرونقی،زردی اور

کمزوری کو دور کرنے کے لیے روزانہ ایک آم کھانا اور. بعد ازاں

ایک گلاس کچی لسی استعمال کرنا بے حد مفید ھے. آم کی گٹھلیاں دو

عدد اور تین سیاہ مرچ کو رگڑ کر سانپ کاٹے والے پلانے سے زہر

دور ھو جائے گا. آم کے سبز پتے ایک تولہ حقے کی چلم میں رکھ کر

کش لگانے سے بواسیر دور ہو جاتی ھے. سوزاک کی مرض میں آم

کی چھال ایک تولہ، ڈھائی تولہ پانی میں رات کو بھگو کر صبح پانی

چھان کر پی لینے سے بےحد فائدہ ھوتا ھے

 

:وٹامن

آم میں وٹامنز اے،بی کی وافر مقدار ھوتی ھے اس کے علاوہ آم میں

گوشت بنانے والے شکری نشاستہ دار روغنی اجزاء،فاسفورس، کیلشیم,

پوٹاشیم اور گلوکوز چوتھا حصہ پانی تین چوتھائی شامل ھوتے ھیں

 

Krona Various Safety Measures

 

Mango Health Benefits

DESI HEALTH TIPS